Category: کراچی
Published on 31 August 2015

ریڈیوپاکستان کراچی کے افسروں میں اختیارات کی جنگ

کراچی: ریڈیوپاکستان کراچی سینٹرل پروڈکشن یونٹ (سی پی یو) میں افسران کے درمیان اختیارات کی جنگ چھڑگئی ۔

کراچی کے مقامی فنکاروں نے افسران کی رسہ کشی میں فریق بننے سے انکار کرتے ہوئے سی پی یو میں کام کرنے سے انکارکردیا،جب کہ دوسری جانب فنکاروں نے ڈائریکٹرجنرل ریڈیوپاکستان عمران گردیزی کو ریڈیو پاکستان کراچی سینٹرل پروڈکشن یونٹ کے افسران کی شکایات تحریری طورپربھیجنے کافیصلہ کر لیاہے۔

فنکاورں کا کہنا ہے کہ ماضی میں بھی ریڈیوکے ملازمین کی اس پالیسی کے باعث فنکاروں نے سینٹرل پرڈوکشن یونٹ آنابندکیاتھاایک مرتبہ پھر سے افسران کے درمیان ناراضگیوں سے فنکاورں کو نقصان پہنچ رہاہے اور ادارہ مزید تباہی کی جانب جائے گا۔

ذرائع کاکہناہے کہ گلوکارتنویرآفریدی، مظہر امراؤ بندو خان، اشتیاق بشیر، وحید خیال سمیت کئی فنکاروں نے ریڈیو پاکستان کراچی سینٹرمیں کام نہ کرنے کافیصلہ کرتے ہوئے مطالبہ کیاہے کہ ڈی جی ریڈیوپاکستان اس مسئلے حل کرنے کی کوشش کریں۔


Category: کراچی
Published on 30 August 2015

ڈاکٹرعاصم کے دور میں سوئی سدرن میں ڈھائی ہزارغیرقانونی بھرتیوں کا انکشاف

 کراچی: سابق مشیر پیٹرولیم ڈاکٹرعاصم حسین کی گرفتاری کے بعد ان کے دور میں  سوئی سدرن میں ڈھائی ہزار غیرقانونی بھرتیوں کا انکشاف سامنے آیا ہے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق رینجرز کی تحویل میں موجود مشیر پیٹرولیم ڈاکٹرعاصم حسین سے تحقیقات کا دائرہ وسیع کردیا گیا ہے جب کہ ذرائع کا کہنا ہے کہ ڈاکٹرعاصم کے دوران میں محکمہ سوئی سدرن گیس کمپنی میں سیاسی دباؤ پر ڈھائی ہزار بھرتیاں کی گئیں جب کہ سابق صدر پرویز مشرف کے دور میں محکمے سے فارغ کئے گئے ملازمین کو دوبارہ بحال کر کے انہیں واجبات کی ادائیگی بھی کی گئی جس سے ادارے پر اضافی بوجھ ڈالا گیا جب کہ سوئی سدرن میں ساڑھے 5 سے 6 ہزار ملازمین کی گنجائش ہے جو بڑھا کر 11 ہزار کردی گئی تھی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ سوئی سدرن کے اس وقت کے ایم ڈی عظیم احمد صدیقی نے سیاسی دباؤ میں آکر عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا جب کہ ڈاکٹرعاصم کے دور میں سوئی سدرن میں ہونے والی بھرتیوں اور ترقیوں کی فہرستیں تیارکی جارہی ہیں۔


Category: کراچی
Published on 28 August 2015

پاسبان کے جنرل سیکرٹری 90 روز کے لئے رینجرز کے حوالے

کراچی: انسدا دہشت گردی کی عدالت نے پاسبان کے جنرل سیکریٹری عثمان معظم کو 90 روز کے لئے رینجرز کے تحویل میں دے دیا۔

ایکسپریس نیوزکے مطابق رینجرز نے  ٹارگٹ کلنگ اور بھتہ خوری میں ملوث پاسبان کے جنرل سیکریٹری عثمان معظم کو انسدادِ دہشت گردی کی عدالت میں سخت  سیکیورٹی  میں پیش کیا۔  اس موقع پر رینجرز کے لا آفیسررانا خالد نے عدالت کے روبرو موقف اختیار کیا کہ ملزم ٹارگٹ کلنگ، دہشت گردوں کی اعانت اور بھتہ خوری میں ملوث ہے اس لئے تفتیش کے لئے اسے 90 روز کے لئے تحویل میں دیا جائے جس پر عدالت نے درخواست منظور کرتے ہوئے ملزم عثمان معظم کو 90  روز کے لئے رینجرز کی تحویل میں دے دیا۔

واضح ر ہے کہ رینجرز کی جانب سے  سیکریٹری پاسبان عثمان معظم کے گھرپرچھاپہ مارا گیا تھا جس کے دوران عثمان معظم کو ان کے بیٹے سمیت حراست میں لے لیا گیا تھا


Category: کراچی
Published on 28 August 2015

کراچی سے گرفتار ملزم کی نشاندہی پر قبرستان سے بھاری تعداد میں اسلحہ برآمد

کراچی: پولیس اور رینجرز نے مشترکہ کارروائی کر کے نارتھ ناظم آباد سے گرفتار ملزم کی نشاندہی پر رضویہ کے علاقے میں واقعہ کھجی گراؤنڈ سے ملحق قبرستان سے بھاری تعداد میں اسلحہ و بارود برآمد کر لیا گیا۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق پولیس اور رینجرز نے نارتھ ناظم آباد سے گرفتارعباسی شہید اسپتال کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر اکاؤنٹس فریدالدین کی نشاندہی پر پولیس اور رینجرز نے مشترکہ کارروائی کر کے رضویہ کے علاقے میں واقع کجھی گراؤنڈ سے ملحق قدیمی قبرستان سے بھاری تعداد میں اسلحہ اور بارود برآمد کر لیا۔ برآمد کئے گئے اسلحے میں پستول، کلاشنکوف، مارٹر گولے اور سیکڑوں گولیاں شامل ہیں۔

واضح رہے کہ عباسی شہید اسپتال کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر اکاؤنٹس فریدالدین کو نارتھ ناظم آباد سے گرفتار کیا گیا تھا اور وہ 90 روز کے لئے رینجرز کی تحویل میں تھا۔ فریدالدین کی ڈگری بھی جعلی ہے اور اس پر ٹرانسفر پوسٹنگ اور بھتہ خوری کے الزامات ہیں