Category: پاکستان
Published on 28 August 2015

خطے میں امن کی کوششیں جاری رکھیں گے مگر کسی کی اجارہ داری یا تسلط قبول نہیں، چوہدری نثار

لندن: وزیر داخلہ چوہدری نثار کا کہنا ہے کہ پاکستان خطے میں امن کے قیام کے لیے اپنی کوششیں جاری رکھے گا مگر کسی ملک کی اجارہ داری یا تسلط قبول نہیں کیا جائے گا جب کہ بھارت کو سمجھنا ہوگا کہ مسئلہ کشمیر کے بغیر مذاکرات کا عمل آگے نہیں بڑھ سکتا۔

لندن میں وزیر داخلہ چوہدری نثار نے برطانوی وزیر خارجہ فلپ ہیمنڈ سے ملاقات کی جس میں دونوں ممالک کے درمیان دوطرفہ تعلقات سمیت دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا گیا اس دوران برطانوی وزیر خارجہ  نے خطے میں پاکستان کی امن کی کوششوں کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ برطانیہ وزیر اعظم نواز شریف کے امن کے ویژن کا اعتراف کرتا ہے اورافغانستان میں مذاکرات کے عمل کو آگے بڑھانے کے لیے پاکستان کے کردار کو بھی سراہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ افغانستان میں مذاکراتی عمل میں کوئی خلل نہیں آئی گا اور یہ عمل مزید آگے بڑھایا جائے گا۔ برطانوی وزیر خارجہ سے ملاقات میں چوہدری نثار کا کہنا تھا کہ پاکستان برطانیہ کے ساتھ اپنے دوستانہ تعلقات کو بہت اہمیت دیتا ہے، دونوں ممالک کے تعلقات میں کسی قسم کی غلط فہمی کی نہ تو کوئی گنجائش ہے اور نہ ہم آنے دیں گے۔

برطانوی وزیر خارجہ نے پاکستان اور بھارت کے درمیان مسائل کا حل بات چیت کے ذریعے نکالنے پر بھی زور دیا جس پر وزیر داخلہ چوہدری نثار کا کہنا تھا کہ بھارت کی عجیب منطق ہے کہ وہ بنیادی مسئلہ کشمیر پر بات سے انکاری ہے اور چاہتا ہے کہ کشمیری رہنماؤں اورمسئلہ کشمیر کا نام ہی نہ لیا جائے لیکن یہ صورتحال پاکستان کے لیے ناقابل قبول ہے اسی لیے بھارت کو سمجھنا ہوگا کہ مسئلہ کشمیر پر بات چیت کے بغیر مذاکرات کا عمل آگے نہیں بڑھ سکتا۔

چوہدری نثار نے کہا کہ پاکستانی حکومت اور اس کے دفاعی اداروں نے مل کرافغانستان میں ڈائیلاگ اور بات چیت کی راہ ہموار کر کے نا ممکن کو ممکن بنایا لیکن ہر مسئلے پر بلا جواز پاکستان کو تنقید کا نشانہ بنانا اور کٹہرے میں کھڑا کرنا کسی صورت قبول نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ خطے کے دوسرے ممالک کو اپنی کمزوریوں اور کوتاہیوں کا بوجھ پاکستان پر ڈالنے سے اجتناب کرنا ہوگا، پاکستان خطے میں امن کے قیام کے لیے اپنی کوششیں جاری رکھے گا مگر کسی ملک کی اجارہ داری یا تسلط قبول نہیں کیا جائے گا۔


Category: پاکستان
Published on 26 August 2015

اٹک میں آئل ٹینکر اور مسافر وین میں تصادم سے 8 افراد جاں بحق، 6 زخمی

اٹک: کوہاٹ روڈ پر آئل ٹینکر اور مسافر وی کے درمیان تصادم کے نتیجے میں 8 افراد جاں بحق جب کہ 6 زخمی ہوگئے۔ 

ایکسپریس نیوز کے مطابق اٹک کی تحصیل جنڈ کے علاقے ڈھوک عنایت کے مٹھیال چوک کے قریب کوہاٹ روڈ پر تیز رفتار آئل ٹینکرز مخالف سمت سے آنے والی مسافر وین سے جا ٹکرایا، حادثے کے نتیجے میں 6 افراد موقع پر ہی جاں بحق جب کہ 8 زخمی ہوگئے۔حادثے کے بعد مقامی لوگوں نے اپنی مدد آپ کے تحت تحصیل ہیڈ کوارٹراسپتال پنڈی گھیب پہنچایا، جہاں مزید 2 زخمی دم توڑ گئے جب کہ دیگرزخمیوں کی حالت بھی تشویشناک بتائی جارہی ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ حادثہ آئل ٹینکرکے ڈرائیورکی مجرمانہ غفلت کا نتیجہ معلوم ہوتا ہے تاہم پولیس نے مقدمہ درج کرکے تحقیقات شروع کردی ہیں۔


Category: پاکستان
Published on 25 August 2015

وزیراعظم کو ڈٹ جانے کا کہنے والے ان کا سیاسی تابوت بنا رہے ہیں، شیخ رشید

 اسلام آباد: 

عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید کا کہنا ہے کہ نوازشریف نے ملک و قوم کی بے عزتی کروائی ہے جب کہ وزیراعظم کو ڈٹ جانے کا کہنے والے ان کا سیاسی تابوت بنا رہے ہیں۔

 

سپریم کورٹ کے باہرمیڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید کا کہنا تھا کہ نوازشریف نے ملک و قوم کی بے عزتی کروائی ہے، جتنے لوگ جے آئی ٹی کو گالیاں نکال رہے ہیں دراصل وہ سپریم کورٹ کو گالیاں دے رہے ہیں،  وزیراعظم کو ڈٹ جانے کا کہنے والے ان کا سیاسی تابوت بنا رہے ہیں، نوازشریف صاحب ڈٹنے کی باتیں چھوڑ دو آپ نااہل بھی ہوں گے اورجیل بھی جائیں گے جب کہ نوازشریف کے پاس سوائے استعفے کے دوسرا آپشن نہیں۔

شیخ رشید نے کہا کہ کل ججز نے کہا کہ اگر آج بھی منی ٹریل تولے آؤ، گزشتہ روزسماعت میں وزیراعظم کے وکیل خواجہ حارث نے تسلیم کیا دبئی میں حکامہ بھی لیا اوروزیراعظم چیئرمین بھی رہے تومیرا خیال ہے کہ کھیل ختم ہوگیا


Category: پاکستان
Published on 01 September 2014

جمہوریت ختم ہوئی تو ذمہ داری عمران خان پر عائد ہوگی،جاوید ہاشمی

 

اسلام آباد.....پاکستان تحریک انصاف کے صدرجاوید ہاشمی نے کہا ہے کہ پارٹی نے شاہراہ دستور سے آگے نہ جانے کا فیصلہ کیا تھا اورعمران خان نے آگے نہ جانے کی یقین دہانی کرائی تھی لیکن اچانک سیف اللہ اور شیخ رشید کچھ پیغامات لیکر آئے اورعمران خان کے کان میں بتائے، عمران خان نے کہا کہ مجبوری ہے ہمیں آگے جانا پڑے گا،عمران خان نےپوچھنے کے باوجود وجہ نہیں بتائی۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے جاوید ہاشمی کا کہنا تھا کہ عمران نے مجھ سے کہا اگر آپ کو اختلاف ہے تو آپ چلے جائیں، میں نے کہا کہ مذاکرات تو ہونے دیں، عمران خان نے کہا کہ میں ادھر ہوں میرا فیصلہ ماننا پڑے گا۔ جاوید ہاشمی نے کہا کہ خان صاحب نے پارٹی فیصلے کے خلاف قدم اٹھایا، کپتان صاحب واپس آجائیں میں آپ کے ساتھ کھڑا ہوں۔ جاوید ہاشمی نے کہا کہ اسلام آباد میں کوئی بڑا واقعہ ہوگیاتو ہم جمہوریت کو نہیں بچا پائیں گے، جمہوریت ختم ہوئی تو ذمہ داری عمران خان پرعائد ہوگی۔ جاوید ہاشمی کا کہنا تھا کہ طاہرالقادری صاحب نےمشروط کیا تھا کہ جب تک عمران آگےنہیں جائیں گے، ہم بھی نہیں جائیں گے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کا صدر ہوں میں نے تو بغاوت نہیں کی۔ انہوں نے کہا کہ کہیں ایسا نہیں ہوتا کہ ڈنڈے ،غلیلیں چلاکر وزیراعظم ہاؤس پر احتجاج کریں،لیڈرشپ سے کہتا ہوں کارکنوں کو مشکلات میں نہ ڈالیں، عمران خان آپ کو آپ کے وعدے یاد دلاؤں گا۔انہوں نے کہا کہ حکومت سے کہتا ہوں بربریت بند کریں۔جاوید ہاشمی نے کہا کہ عمران خان طاہرالقادری کے پیروکار بن گئے ہیں۔