Published on 22 September 2015

ٹھٹھہ اور بدین 2040 تک ڈوب جائیں گے ، ماہرین

اسلام آباد: موسمیاتی تبدیلیوں سے کوسٹل ایریا کے ہزاروں افراد بے گھر ہوگئے، ڈیلٹا کا 35 لاکھ ایکڑ سمندر برد ہو گیا، فیکٹریوں کا زہریلا فضلہ اور کوڑا کرکٹ سمندر میں گرنے سے سمندری حیات کو شدید خطرات لاحق ہوگئے ہیں، عالمی اسٹڈی کے مطابق 2040 سال کے دوران ٹھٹھہ اور بدین ڈوب جائیں گے۔

73 فیصد آبادی کم خوراکی کا شکار ہے، سمندر بدین شہر سے 40 کلو میٹر دور رہ گیا ہے جس سے ڈیلٹا ختم ہو رہا ہے، اب صورت حال یہ ہے کہ سمندر دریا کے اندر داخل ہوگیا ہے، غیر سرکاری تنظیم آکسفین کی طرف سے ایکسپریس کو کراچی کے علاقے ابراہیم حیدری، ٹھٹھہ، بدین اور کیٹی بندر گاہ کا دورہ کرایا گیا، اس موقع پر پاکستان فشریز فورم کے چیئرمین محمد علی شاہ نے ایکسپریس کو بتایا کہ ہم موسمیاتی تبدیلیوں کی سزا زیادہ بھگت رہے ہیں، حکومتوں نے کوسٹل ایریا کو نظرانداز کیا ہوا ہے، زندگی کی بنیادی سہولتیں، اسکولز، صحت اور انفرا اسٹرکچر نام کی کوئی چیز نہیں ہے۔

1050کلو میٹر کوسٹل ایریا ہے جس میں 700کلو میٹر کوسٹل ایریا بلوچستان میں ہے، سرکریک میں دونوں ملک ایک دوسرے کے مچھیرے پکڑ لیتے ہیں اس کا مستقل حل نکالا جائے، ٹھٹھہ کے رہائشی گلاب شاہ کا کہنا تھا کہ ڈیلٹا کی35 لاکھ ایکڑ زمین سمندر نگل گیا ہے، ان کی 375 ایکڑ زمین تھی جو ساری سمندر میں چلی گئی ہے، اب گھر تک نہیں ہے، موسمیاتی تبدیلیوں سے 5 سے 6 فٹ پانی سطح زمین کے قریب ہوگیا ہے جس سے زرعی زمینیں کلر اور سیم تھور کی وجہ سے تباہ ہوگئی ہیں، اب زمیندار مچھیرے بن گئے ہیں،81 ہزار ایکڑ زمین سیم زدہ ہوگئی ہے


Published on 21 September 2015

پاکستان کے بغیر سری لنکا دہشت گردی سے چھٹکارا نہ پاتا، سری لنکن ہائی کمشنر

اسلام آباد: پاکستان میں سری لنکا کی قائم مقام ہائی کمشنر وجیانتھی ایدری سنگھے نے کہا کہ پاکستان کا تعاون اگر نہ ہوتا تو سری لنکا عشروں پر محیط دہشت گردی و خانہ جنگی سے چھٹکارا حاصل نہ کر پاتا۔

اسلام آباد کی بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی کے شعبہ سیاسیات وعالمی تعلقات کے زیراہتمام منعقدہ پاک سری لنکا تعلقات کے موضوع پر سیمینار کا انعقاد ہوا، تقریب سے خطاب کے دوران پاکستان میں سری لنکا کی قائم مقام ہائی کمشنر نے کہا کہ دونوں ممالک کے مابین بہترین دفاعی تعلقات قائم ہیں، دونوں ممالک کے مابین تجارت مستقبل میں ایک بلین امریکی ڈالر تک پہنچنے کا امکان ہے۔

وجیانتھی ایدری سنگھے نے کہا کہ پاکستان کا تعاون اگر نہ ہوتا تو سری لنکا عشروں پر محیط دہشت گردی و خانہ جنگی سے چھٹکارا حاصل نہ کر پاتا۔


Published on 17 September 2015

پی آئی اے کے 302 ملازمین جعلی ڈگری پر برطرف

اسلام آباد: ترجمان پی آئی اے کا کہنا ہے کہ ادارے کے 302 ملازمین کو جعلی ڈگریوں پر نوکری سے برطرف کیا گیا ہے۔ 

ایکسپریس نیوز کے مطابق ترجمان پی آئی اے کا کہنا ہے کہ قومی ایئر لائن کے خسارے میں 37 فیصد کمی اور ادارے کی آمدنی میں 6 فیصد اضافہ ہوا، خسارے والے روٹ بند کرنے سے ایک ارب20 کروڑ کی بچت ہوئی تاہم انکا کہنا تھا کہ جعلی ڈگری کے حوالے سے 302 ملازمین کو نکالا گیا ہے۔

قومی ایئر لائن کے ترجمان کا کہنا تھا کہ عازمین حج کی روانگی کے لئے پروازوں کا سلسلہ جاری ہے جب کہ حاجیوں کی واپسی کے لئے آپریشن 27 ستمبر سے شروع ہوگا جو کہ 28 اکتوبرکو مکمل ہوگا


Published on 17 September 2015

پاکستان کا ’’نیوکلیئر سپلائرز گروپ‘‘ کی رکنیت کا مطالبہ

اسلام آباد: پاکستان نے امریکا کے ساتھ جوہری عدم پھیلاؤاور اسٹرٹیجک برآمدی کنٹرول پر ہونے والے مذاکرات میں عالمی ادارے ’’نیوکلیئر سپلائرز گروپ‘‘ کی رکنیت کا مطالبہ کیا ہے۔

اس ضمن میں پاکستان امریکا اسٹرٹیجک ڈائیلاگ کے تحت اسٹرٹیجک ایکسپورٹ کنٹرول پر اجلاس اسلام آبادمیں ہوا۔ دفتر خارجہ کے ترجمان قاضی خلیل اﷲ کے مطابق امریکا کے پرنسپل ڈپٹی اسسٹنٹ سیکریٹری برائے عالمی سلامتی و جوہری عدم پھیلاؤ وان وین ڈائپن اور ایڈیشنل سیکریٹری برائے اقوام متحدہ و اقتصادی تعاون تسنیم اسلم نے اجلاس کی مشترکہ صدارت کی جس میں ماہرین نے ایٹمی عدم پھیلاؤ کے حوالے سے اقدامات اور تجربات پر غور کیا۔

امریکی وفد نے برآمدی کنٹرول کے حوالے سے عالمی معیار اور کنٹرول فہرستوں کو عالمی کنٹرول فہرستوں کی سطح پر لانے کیلیے پاکستان کے اقدامات کے تعریف کی۔ اس موقع پر پاکستانی حکام نے امریکی وفد کو پاکستان کے اسٹرٹیجک کنٹرول سسٹم میں ہونے والی حالیہ تبدیلیوں سے بھی آگاہ کیا۔

امریکی وفد نے ایکسپورٹ کنٹرول کے سلسلے میں اپنے اقدامات، طریقہ کار اور تربیتی انتظامات سے متعلق بتایا۔ ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ جوہری عدم پھیلاؤ اور اپنے برآمدی کنٹرولز کو مضبوط کرنے کے سلسلے میں کیے گئے پاکستان اقدامات کو عالمی برادری نے سراہا اور تسلیم کیا ہے۔ پاکستان بڑے پیمانے پر تباہی پھیلانے والے ہتھیاروں اور ان کے ڈیلیوری سسٹم کے عدم پھیلاؤ کے عزم پر پوری طرح کاربند ہے۔

پاکستان نیوکلیئر سپلائرز گروپ کی رکنیت کا حقدار ہے اور وہ اس معیار پر پورا اترتا ہے۔ ترجمان نے مزید بتایا کہ یہ اجلاس ’’پاک امریکا اسٹرٹجیک ڈائیلاگ‘‘ کے تحت ہوا۔ فریقین نے اس بات پر اتفاق کیا کہ اس طرح کی ملاقاتوں کا سلسلہ جاری رکھا جائے