Category: یو اے ای
Published on 14 January 2015

فرانسیسی جریدے پر حملہ اسلام کی عظیم شخصیات کی توہین کا بدلہ ہے، القاعدہ کا ویڈیوپیغام

دبئی: القاعدہ نے گزشتہ ہفتے توہین آمیز خاکے شائع کرنے والے فرانسیسی جریدے ’’چارلی ہیبڈو‘‘ پر حملے کی ذمہ داری قبول کرلی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق القاعدہ کی جزیرہ نماعرب شاخ کی جانب سے ’’ پیرس کی بابرکت جنگ کے حوالے سے ایک پیغام‘‘ نامی وڈیو جاری کی گئی ہے، وڈیو میں القاعدہ کے رہنما نصرالانسی کو کہتے سنایا گیا ہے کہ فرانسیسی جریدے چارلی ہیبڈو پر حملہ توہین آمیز خاکوں کا بدلہ ہے، جسے القاعدہ کے مرکزی سربراہ ایمن الظواہری کے حکم پر انجام دیا گیا۔

ویڈیو میں نصرالانسی کا کہنا تھا کہ پیرس میں کئے گئے اس حملے کے لئے ہدف کے انتخاب سمیت تمام تر منصوبہ بندی اور مالی معاونت القاعدہ کی جزیرہ نما عرب شاخ نے کی اور  ہم نے اس کے لئے جن لوگوں کا انتخاب کیا انہوں نے بھی ہماری آواز پر لبیک کہا۔  اس حملے کے ذریعے ہر اس شخص کے لئے کھلا پیغام دے دیا گیا ہے جو اسلام کی عظیم شخصیات اور تعلیمات کی توہین کرتے ہیں، اگر انہیں اظہار کی آزادی ہے تو ہمارے جوابی اقدام کوبھی قبول کرنا ہوگا۔

دوسری جانب چارلی ہیبڈو ایک مرتبہ پھر آزادی اظہار کے نام پر توہین آمیز خاکوں کا سلسلہ بند کرنے سے باز نہیں آیا ہے، جریدے نے اپنا وہ نیا شمارہ فروخت کے لئے پیش کر دیا ہے جس کے سرورق پر توہین آمیز خاکہ شائع کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ چارلی ہیبڈو نے توہین آمیز خاکے شائع کئے تھے جس پر گزشتہ ہفتے نامعلوم افراد نے اس کے دفتر پر حملہ کرکے 12 افراد کوہلاک کردیا تھا جب کہ پولیس کی کارروائی کے دوران بھی متعدد افراد مارے گئے تھے۔

 

Category: یو اے ای
Published on 29 November 2014

کھلاڑی شارجہ ٹیسٹ کھیلنے کو تیار نہ تھے، کیوی کوچ

شارجہ: فلپ ہیوز کے انتقال پر انتہائی رنجیدہ کیوی کرکٹرز شارجہ ٹیسٹ کھیلنے کو تیار نہیں تھے۔

کوچ مائیک ہیسن کے بیان نے ’’ایکسپریس‘‘ میں جمعہ کو شائع ہونے والی خبر کی تصدیق کردی جسے کراچی سے سلیم خالق نے فائل کیا تھا، ہیسن نے کہا کہ آسٹریلوی بیٹسمین کی کرکٹ کے میدان میں حادثاتی موت نے سب کو حد سے زیادہ افسردہ کردیا تھا، پلیئرز کی ذہنی کیفیت ایسی نہیں تھی کہ کھیل جاری رکھ پاتے، کھلاڑیوں کو میدان میں اترنے کیلیے آمادہ کرنے کے حوالے سے کافی دیر تک بات چیت چلتی رہی، ہمارے لیے اہم مسئلہ انھیں اس کیفیت سے نکالنے کا تھا، بالآخر بڑی کوشش کے بعد ان کا حوصلہ بڑھایا، ٹیسٹ کا دوسرا دن کرکٹ نہیں بلکہ آنجہانی کو خراج پیش کرنے کیلیے تھا، پلیئرز کو علم تھا کہ ان کو اس مشکل وقت میں ایک دوسرے کا ساتھ دینا ہے، ہم کھیل سے زیادہ اپنے حوصلے برقرار رکھنے کیلیے فکرمند تھے۔

انھوں نے کہا کہ شارجہ ٹیسٹ میںکسی پرفارمنس کی خوشی نہ منانا بھی دکھ کے ماحول میں ایک فطری عمل ہے، کسی کو ہیلمٹ پہناکر کلوز فیلڈنگ کیلیے نہیں کہا گیا، فلپ ہیوز کے احترام میں بائونسر پھینکنے سے بھی گریز کیا تھا، انھوں نے کہا کہ مارک کریگ نے گیند کو خوب گھماتے ہوئے کامیابی سمیٹی، برینڈن میک کولم نے ثابت کیا کہ ایک بار جم کر کھڑے ہوجائیں تو ٹیم کیلیے کیا کچھ کرسکتے ہیں۔


Category: یو اے ای
Published on 27 November 2014

فلپ ہیوز کے سوگ میں شارجہ ٹیسٹ کے دوسرے روز کا کھیل معطل

شارجہ: آسٹریلیوی بلے باز فلپ ہیوز کے انتقال کے باعث پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان  شارجہ میں جاری دوسرے روز کا کھیل معطل کر دیا گیا ہے۔

آسٹریلیا کے نوجوان بلے باز فلپ ہیوز کے انتقال کے باعث پاکستان اور نیوزی لینڈ کے درمیان شارجہ میں جاری تیسرے ٹیسٹ کے دوسرے روز کا کھیل معطل کر دیا گیا ہے۔ پہلے دوسرے روز کا کھیل ایک گھنٹے کے لئے معطل کرنے کا فیصلہ کیا گیا تاہم بعد ازاں پاکستان اور نیوز ی لینڈ کے کرکٹ بورڈ آفیشلز نے مشترکہ  طور پر دوسرے روز کا کھیل مکمل طور پر معطل کرنے کا فیصلہ کیا۔ اب دونوں ٹیموں کے مابین دوسرے روز کا کھیل جمعہ کو ہو گا۔

قومی ٹیم کے مینیجر معین خان کا کہنا تھا فلپ ہیوز کے انتقال کی خبر سن کر بہت افسوس ہوا اور ہم نے نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ کے ساتھ مل کر دوسرے روز کا کھیل معطل کرنے کا فیصلہ کیا۔

واضح رہے کہ 26 سالہ آسٹریلیوی بلے باز فلپ ہیوز  شیفلڈ شیلڈ ٹورنامنٹ کے دوران فاسٹ بولر سین ایبٹ کی گیند سر پر لگنے کے باعث شدید زخمی ہو گئے تھے اور 2 روز کومے کی حالت میں رہنے کے بعد اسپتال میں انتقال کر گئے۔ فلپ ہوز کے انتقال پر پوری کرکٹ براردی غم میں نڈہال ہے۔


Category: یو اے ای
Published on 21 November 2014

فتوحات کی راہ میں ’’اسپیڈ بریکر‘‘ آنے سے پاکستان مایوس

دبئی: فتوحات کی راہ میں ’’اسپیڈ بریکر‘‘ آنے سے پاکستانی کپتان مایوس ہو گئے۔

مصباح الحق کا کہنا ہے کہ ڈراپ کیچز نے کیویز کے حوصلے جوان کردیے، مواقع ضائع نہ کرتے تو میچ کا نتیجہ مختلف ہوتا،ہدف کے تعاقب میں 3 وکٹیں جلد گرنے سے مشکل ہوگئی۔تفصیلات کے مطابق میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کپتان مصباح الحق نے کہاکہ فتوحات کا سفر رکنے پر تھوڑی مایوسی ہوئی ہے، ہم اس سے بہتر کھیل کا مظاہرہ کرسکتے تھے، ڈراپ کیچز فرق ثابت ہوئے،ان سے کیویز کی ہمت بڑھ گئی، اگر مواقع ضائع نہ کرتے تو میچ کا نتیجہ ہمارے حق میں ہوسکتا تھا،انھوں نے کہا کہ ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے پلان یہی تھا کہ 40اوورز تک نارمل انداز میں کھیلتے ہوئے سرفراز احمد کو بیٹنگ آرڈر میں اوپر بھیج کر کامیابی کی طرف بڑھیں گے۔

مگر3وکٹیں جلد گرنے سے مہم کمزور پڑ گئی، انھوں نے کہا کہ وکٹ کیپر بیٹسمین زندگی کی بہترین فارم میں ہیں،ان کی بیٹنگ دیکھ کر کوئی نہیں کہہ سکتا کہ یہ ایک مشکل پچ تھی، ہمارے اسپنرز نے بھی بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا، کیویز کو بھی داد دینا ہوگی کہ انھوں نے پہلے میچ  کی غلطیوں سے سبق سیکھ کر یہاں نہ صرف بہترکھیل پیش کیا بلکہ چند مواقع پر تو ہمیں دباؤ میں لانے میں بھی کامیاب ہوگئے۔

نیوزی لینڈ کے کپتان میک کولم نے کہا کہ پاکستان کے گذشتہ میچز میں پلان کا جائزہ لینے کے بعد ہی اندازہ ہوگیا تھا کہ ٹاس بہت اہم ہوگی،خوشی کی بات ہے کہ کھلاڑیوں نے بہت جلد مختلف کنڈیشنز میں اچھی کارکردگی دکھانے کا ہنر سیکھ لیا، روس ٹیلر کی بروقت فارم میں واپسی نے ہمیں مشکل سے نکالا، پلیئرز کو حاصل ہونے والا اعتماد اگلے مقابلوں میں بھی کام آئے گا، انھوں نے کہا کہ اننگز ڈیکلیئرڈکرنے کا فیصلہ درست تھا،میچ کا اختتام دونوں ٹیموں کے حق میں بہتر رہا، مجھے اپنے پلیئرز کی کارکردگی پر فخر ہے۔